فرانس نے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں یونیسف کی صحت اور حفاظتی ٹیکوں کی مہم کے لیے 3ملین یورو کی امداد کا اعلان کردیا

16 اگست 2023
A boy receives an injection at a medical camp for flood affected people in Sindh
UNICEF/Pakistan/Shehzad Noorani

16 اگست 2023:  حکومت ِفرانس نے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں یونیسف کے تحت صحت عامہ کے   امدادی اقدامات کے لیے 30 لاکھ یورو (تقریبا 32.7لاکھ  امریکی ڈالر) مختص کردیے ہیں۔ اس اہم امداد  سے صوبہ سندھ کے سب سے زیادہ متاثرہ اضلاع میں صحت کی بنیادی خدمات  اور حفاظتی ٹیکوں کی فراہمی میں مدد ملے گی، جس سے تقریباً 19 لاکھ   خواتین اور بچے مستفید ہونگے۔

فرانس کی جانب سے اس  تعاون کا اعلان  رواں  سال کے اوائل میں جنیوا میں اقوام متحدہ اور حکومت پاکستان کی مشترکہ میزبانی  میں پاکستان کو   موسمیاتی تبدیلی کا سامنا کرنے کے قابل بنانے    کے حوالے سے  منعقدہ   بین الاقوامی کانفرنس کے بعد کیا گیا تھا۔ کانفرنس میں سیلاب متاثرین  کی بحالی اور آبادکاری  کے لئے بین الاقوامی حمایت حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ پاکستان کو موسمیاتی تغیر سے نمٹنے اور ماحول سے موافقت  حاصل کرنے کے  قابل بنانے  کے لئے طویل مدتی شراکت داری بھی قائم  کی گئی۔

پاکستان میں فرانس کے سفیر جناب نکولس گیلی نے اس موقع پر کہا، ’’بچے اکثربحرانوں اور قدرتی آفات کا پہلا شکار ہوتے ہیں، لیکن ان کے نظر نہ آنے والے منفی   اثرات بچوں کو طویل عرصے تک برداشت کرنے پڑتے ہیں ۔ فرانس  کو خوشی ہے کہ ہم بنیادی صحت کی دیکھ بھال کی سہولیات  تک رسائی  بڑھانے اور سندھ میں سب سے زیادہ خطرے سے دوچار    برادریوں کے لئے حفاظتی ٹیکوں کی فراہمی  کو بہتر بنانے کے لئے یونیسف کے ساتھ مل کر کام کررہے ہیں۔‘‘

صوبہ سندھ گزشتہ سال کے سیلاب سے سب سے زیادہ متاثر ہوا تھا۔ سیلاب سے تقریبا ایک کروڑ 45لاکھ  افراد متاثر ہوئے اور تقریبا  ایک ہزار صحت کی سہولیات کو نقصان پہنچا یا مکمل طور پر تباہ ہوگئیں۔ عام لوگ اور صحت عامہ کے کارکن بے گھر ہو گئے، جبکہ طبی سامان اور خدمات کو بھی نقصان پہنچا اور ان کی فراہمی  میں خلل پڑا۔

گزشتہ ایک سال کے دوران یونیسف نے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں 36لاکھ افراد کو بنیادی صحت کی سہولیات فراہم کی ہیں، لیکن بہت سی برادریوں کے لئے اب بھی یہ سہولیات  رسائی سے باہر ہیں۔

پاکستان میں یونیسف کے سربراہ ، عبداللہ فاضل نے کہا،’’مون سون کی آمد سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں بچوں اور عورتوں کی صحت کو درپیش  خطرات کو بڑھا دیتی ہے۔ ملیریا، ڈینگی اور شدید آبی ڈائریا جیسی بیماریوں کا پھیلاؤ خاص طور پر تشویش کا باعث ہے۔  فرانس کی جانب سے یہ فراخدلانہ امداد   انتہائی ضرورت کے وقت مل رہی ہے جس سے  یونیسف کو  صحت  کی سہولیات کو وسعت دینے اور حفاظتی ٹیکوں  کی فراہمی کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔ ‘‘

2022 میں تباہ کن سیلاب نے تقریبا تین کروڑ تیس لاکھ  افراد کو متاثر کیا ، جن میں ایک کروڑ ساٹھ لاکھ بچے بھی شامل تھے ، اور اس واقعے کو موسمیاتی تبدیلی سے ہونے والی ایک  بڑی تباہی کے طور پر تسلیم کیا گیا تھا۔ عالمی گرین ہاؤس اخراج میں ایک فیصد سے بھی کم  کا حصہ دار کے باوجود پاکستان کو موسمیاتی تبدیلی کے  سب سے زیادہ خطرے سے دوچار  ممالک میں سے ایک سمجھا جاتا ہے۔ موسمیاتی تبدیلی  کے بحران سے فوری طور پر نمٹنے، قابل توسیع حل تلاش کرنے اور بچوں اور سب سے زیادہ خطرے سے دوچار  برادریوں کی زندگیوں اور ان کے  قیمتی وسائل کی حفاظت کے لیے بین الاقوامی تعاون اور مضبوط شراکت داری وقت کی اہم ضرورت ہیں ۔

xxx

میڈیا رابطے

Abdul Sami Malik
Communication Specialist
UNICEF Pakistan
ٹیلیفون: +92-300-855-6654
ٹیلیفون: +92-51-209-7811
ای میل: asmalik@unicef.org

About UNICEF

UNICEF promotes the rights and wellbeing of every child, in everything we do. Together with our partners, we work in 190 countries and territories to translate that commitment into practical action, focusing special effort on reaching the most vulnerable and excluded children, to the benefit of all children, everywhere.

For more information about UNICEF and its work for children, visit www.unicef.org

Follow UNICEF on Twitter, Instagram and Facebook